• 24Newspk

ابھرتے ہوئے باصلاحیت فاسٹ باولرز کو زیادہ سے زیاد،وسیم اکرم نے ایسی بات کہہ دی کہ آپ بھی



اسلام آباد ۔ 10 مئی (24 نیوز پی کے) لیجنڈری کرکتر سابق کپتان پاکستان کرکٹ ٹیم ورلڈ کپ 92 کے ہیرو وسیم اکرم نے کہا کہ پاکستان کرکٹ ٹیم کے ابھرتے ہوئے باصلاحیت باؤلرز کو زیادہ سے فرسٹ کلاس کرکٹ کھیلنی چاہیے تاکہ ان کی کارکردگی بہتر ہوگی۔


وسیم اکرم کا کہنا تھا کہ ٹی 20 کرکٹ تفریح کے لئے اچھی کرکٹ ہے لیکن اس سے بہترین فاسٹ باؤلر نہیں بنا سکتے اس کے لئے آپ کو فرسٹ کلاس کرکٹ زیادہ سے زیادہ کھیلنی پڑے گی۔ کیوں کہ ٹی 20 کرکٹ میں باؤلرز کے پاس اتنا موقع نہیں مل سکتا جس کی وجہ سے ان کارکردگی غیر معمولی نہیں ہوسکتی، اس کے لئے طویل فارمیٹ کی کرکرٹ کھیلنی پڑے گی اس سے بوؤلرز کی کارکردگی کو جانچا جا سکتا ہے۔


سوئنگ سلطان جنہوں نے 1984 میں اپنے کیریر کا آغاز کیا تھا انہون نے بتایا کہ جب وہ آئے تھے انہوں کس طرح اپنے سینیئرز سے گر سیکھے،انہوں نے مزید بتایا کہ جب وہ پاکستان کرکٹ ٹیم ٓئے تو اس وقت سابق کپتان عمران کان اور جاوید میانداد سے اپنے بارے میں تبصرے سنتے تھے کہ دیکھو کتنا ٹیلنٹ ہے لڑکے میں، میں نے جب ان سے پوچھا کہ مجھ میں آپ کو ایسا کیا ٹیلنٹ نظر آتا ہے تو انہوں نے کہا کہ آپ نپی تلی بولنگ کرتے ہیں۔


وسیم اکرم نے بتایا کہ کہا جب وہ اپنے پہلے دورے پر نیوزی لینڈ کئے اور وہاں انہوں اپنی اچھی بولنگ سے 10 وکٹیں لیں تو مجھے احساس ہوا کہ یہ کارکردگی میرے لئے اور میرے ملک کے لئے بڑا اعزاز ہے اور میں نے اس وقت سوچا کہ میں نے 20 سال کرکٹ کھینی ہے۔وسیم اکرم نے بتایا کہ میں نے بولنگ کو بہتر کرنے کے لئے بہت محنت کی ،پریکٹس سیشن کے دوران میں رواؤنڈ دی وکٹ بوؤلنگ کراتا تھا سوچتا تھا کہ ایسا کرنا سے بیٹسمینوں کو کھیلنے میں مشکل ہوگی ۔


میں آج کل بہت سارے تیز بولروں کو دیکھتا ہوں وہ تیز بھاگتے ہوئے تیز رنرپ کے ساتھ بغیر کسی ورائ ٹی کےباولنگ کرتے ہیں۔ اس سے کسی بلے باز کو دشواری کا سامنا نہیں ہوگا۔ بہت ساری چھوٹی چھوٹی چیزیں ہیں جو بولر کسی بلے باز کو پریشان کرنے کے لئے استعمال کرسکتے ہیں۔


16 views

Subscribe to 24Newspk 

Contact us

© 2020 by 24newspk.com all rights reserved

  • Facebook
  • Twitter
  • YouTube