• 24newspk

ورلڈ کپ سکواڈ سے ڈراپ ہونے پر اعظم خان کا ردعمل بھی آگیا



ویب ڈیسک (24 نیوز پی کے )رواں ماہ یو اے ای میں ورلڈ ٹی ٹوئنٹی کا آغاز ہو رہا ہے پاکستان اپنا پہلا میچ 24 اکتوبر کو روایتی حریف بھارت کے خلاف کھیلے گا۔قومی ٹیم کا اعلان پہلے ہو چکا تھا اور شائقین کرکٹ ٹیم سلیکشن پر تنقید کر رہے تھے اور کچھ کھلاڑیوں کی سلیکشن پر تنقید بھی ہو رہی تھی جن میں اعظم خان بھی شامل تھے۔ پی سی بی کے چیئرمین رمیز راجہ نے ٹیم میں تبدیلیوں کا عندیا دے دیا تھا اس کے بعد نیشنل ٹی 20 کپ میں پرفارم کرنے والے کھلاڑیوں کو ٹیم میں شامل کیا گیا ہے جن میں سینئر کھلاڑی شعیب ملک کو صہیب مقصود کی جگہ ٹیم میں شامل کیا گیا اور سرفراز احمد کو اعظم خان کی جگہ ٹیم میں شامل کیا گیا ہے۔ورلڈکپ اسکواڈ سے آؤٹ ہونے والے اعظم خان جنہیں نیشنل کپ میں خراب پرفارمنس کی بدولت ٹیم سے نکالا گیا ہے ، اُن کا بیان سامنے آگیا ہے۔سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر ٹویٹ کرتے ہوۓ اعظم خان کا کہنا تھا کہ اچھے دنوں کے لیے شکر جبکہ برے دنوں کے لیے صبر کرنا چاہیے۔


اُن کے اس بیان سے قبل سابق کرکٹر مدثر نذر کا بیان بھی سامنے آیا تھا کس میں اُنہوں نے اعظم خان کو اسکواڈ سے نکالے جانے کی مزمت کرتے ہوۓ چیف سلیکٹر محمد وسیم کو مستعفیٰ ہونے کا کہا تھا۔واضح رہے کہ محمد وسیم نے اپنے بیان میں کہا تھا کہ تبدیلیاں صورتِ حال کو دیکھتے ہوۓ کی گئ ہیں۔ اُن کا یہ بھی کہنا تھا کہ جن نوجوان کھلاڑیوں کو ڈراپ کیا گیا ہے اُنہیں ہمت نہیں ہارنی چاہیے۔



129 views0 comments