• 24newspk

ویرات کوہلی ٹی 20 ورلڈ کپ کے بعد شائد مختصر فارمیٹ کی کرکٹ سے ریٹائر ہو جائیں! شعیب اختر


24 نیوز پی کے: پاکستانی ٹیم کے سابق فاسٹ باؤلر شعیب اختر نے دعویٰ کیا ہے کہ بھارت کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان ویرات کوہلی ٹی 20 ورلڈ کپ کے بعد شائد مختصر فارمیٹ کی کرکٹ سے ریٹائر ہو جائیں ۔

آئندہ ماہ آسٹریلیا میں شروع ہونے والے ٹی 20 ورلڈ کپ میں بھارتی کرکٹ ٹیم کے بلے باز ویرات کوہلی اپنی ٹیم کا حصہ ہوں گے ، ویرات کوہلی کافی عرصہ سے فارم میں نہیں تھے مگر حالیہ ایشیاء چیمپئن شپ میں وہ بھرپور فارم میں نظر آئے اور 3 سال بعد انٹرنیشنل کرکٹ میں سینچری بنائی ۔نجی ٹی وی “جیو نیوز “کے مطابق پاکستان کے سابق سپیڈ سٹار شعیب اختر نے بھارتی میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ممکن ہے کہ ویرات کوہلی ٹی 20 ورلڈ کپ کے بعد ٹی 20 کرکٹ سے ریٹائر ہو جائیں۔


وہ ایسا اپنی دیگر فارمیٹس کی کرکٹ پر توجہ مرکوز رکھنے کیلئے کریں گے ، اگر ان کی جگہ میں بھی ہوتا تو اپنے مستقبل کا فیصلہ دور اندیشی کا مظاہرہ کرتے ہوئے لیتا۔آپ کو بتاتے چلیں کہ ویرات کوہلی نے بھارت کے لئے 104 ٹی ٹوئنٹی میچ کھیلے ،انہوں نے 3584 رنز بنائے جس میں ایک سنچری اور 32 نصف سنچریاں شامل ہیں۔ویرات کوہلی نے2 جون 2010 میں زمبابوے کے خلاف پہلا ٹی 20 میچ کھیلا تھا۔



24Newspk: Former Pakistani fast bowler Shoaib Akhtar has claimed that former Indian cricket team captain Virat Kohli may retire from short format cricket after the T20 World Cup.


Indian cricket team batsman Virat Kohli will be a part of his team in the T20 World Cup starting next month in Australia. A year later, he made a century in international cricket. According to private TV "Geo News", former speed star of Pakistan Shoaib Akhtar while talking to Indian media said that it is possible that Virat Kohli will retire from T20 cricket after the T20 World Cup.


He will do this to focus on his other formats of cricket, if he were in his place, he would have taken the decision of his future by showing foresight. Let us tell you that Virat Kohli has played 104 T20 matches for India. Played, he scored 3584 runs, including one century and 32 half-centuries. Virat Kohli played his first T20 match against Zimbabwe on 2 June 2010.


30 views0 comments