• 24newspk

پی سی بی ایوارڈز 2021 کے لئے شاہین شاہ آفریدی پانچ کیٹیگریز میں شامل


ویب ڈیسک(24نیوز پی کے) پاکستان کرکٹ ٹیم کے لئے 2021 بہترین رہا جس میں پاکستان نے کئی کامیابیاں حاصل کیں ،پاکستان نے ورلڈ ٹی 20 میں بھارت کو پہلی دفعہ شکست دے کر تاریخ رقم کرد ی اس کے بعد نیوزی لینڈ کو شکست دی ،نیوزی لینڈ جو سیکیورٹی کا بہانہ بنا کر میچ سے چند لمحے پہلے واپس وطن چلی گئی تھی جس پر پاکستان کی عوام بہت غصہ تھی اس کے پاکستان نے بنگلادیش کو بنگلادیش میں شکست دے کر سیریز کلین سویپ کی اس کے علاوہ ویسٹ انڈیز ،زمباوے جنوبی افریقہ کے خلاف فتوحات حاصل کیں جس کے نتیجے میں پاکستان کے کھلاڑی آئی سی سی کے ایوارڈ ز کے لیے منتخب ہوئے ہیں ۔ پاکستان کرکٹ بورڈ نے پی سی بی ایوارڈز 2021 کے لیے نامزدگیوں کی فہرست جاری کردی ہے، پاکستان کے فاسٹ باؤلر شاہین شاہ آفریدی کو کو پانچ مختلف کیٹیگریز میں شامل کیا گیا ہے۔



قومی ٹیم کے 21 سالہ نوجوان فاسٹ باؤلر شاہین شاہ آفریدی نے 2021 میں ٹیسٹ ون ڈے اور ٹی 20 میں اعلیٰ کارکردگی دکھاتے ہوئے پاکستان کو بہت سے میچ جیتوائے ہیں ، شاہین شاہ آفریدی نے ورلڈ ٹی 20 میں بھارت کے خلاف میچ جیتوانے میں اہم کردار ادا کیا انہوں نے بھارت کے خلاف تین اہم وکٹیں حاصل کیں ۔شاہین شاہ آفریدی کو سال کی سب سے متاثر کن کارکردگی، ٹی ٹوئنٹی انٹرنیشنل کرکٹر آف دی ایئر، ون ڈے انٹرنیشنل کرکٹر آف دی ایئر، ٹیسٹ کرکٹر آف دی ایئر اور سال کے متاثر کن کارکردگی اور سال کے سب سے قیمتی کرکٹر کی کیٹیگریز میں نامزد کیا گیا ہے۔شاہین شاہآفریدی نے 2021 میں ٹیسٹ کرکٹ میں 9 میچ کھیل کر 47 وکٹیں حاصل کیں ون ڈے کرکٹ میں 6میچوں میں 8 وکٹیں اور 21 ٹی 20 میچوں میں 23 وکٹیں حاصل کیں ۔ کٹیگری میں ان کے علاوہ تین اور نامزدگیاں بھی ہیں جن میں کپتان بابراعظم ،فواد عالم اور حارث رؤف شامل ہیں ۔ایمرجنگ کرکٹر آف دی ایئر کے لیے ارشد اقبال، اعظم خان، محمد وسیم جونیئر اور شاہنواز دہانی کو شارٹ لسٹ کیا گیا ہے۔



پاکستان کرکٹ ٹیم کے فاسٹ باؤلر شاہین شاہ آفریدی سمیت تمام کھلاڑیوں کی نامزدگی 10 رکنی آزاد پینل نے کی ہے، ان کی سیکشن پینل میں سابق بین الاقوامی کرکٹرز، براڈکاسٹرز اور میڈیا نمائندگان شامل ہیں۔پاکستان کرکٹ بورڈ ایوارڈز جیتنے والے فاتحین کا اعلان ایک ورچوئل ڈیجیٹل شو کے ذریعے کرے گا۔ یہ ڈیجٹل شو 6 جنوری بروز جمعرات کی شام 7 بجے پاکستان کرکٹ بورڈ کے آفیشل یوٹیوب اور فیس بک چینلز پر براہ راست نشر کیے جائیں گے


151 views0 comments