• 24newspk

گرلز کالج کی حدود میں پچ بنانے کا معاملہ، ہائیکورٹ نے سابق کپتان سرفراز احمد کو طلب کر لیا


24 نیوز پی کے: قومی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان سرفراز احمد کو گرلز کالج کی حدود میں پچ بنانے کے معاملے پر سندھ ہائیکورٹ طلب کرلیا گیا۔

نجی ٹی وی ایکسپریس نیوز کے مطابق ہائیکورٹ میں نارتھ ناظم آباد میں سابق کپتان سرفراز احمد، سرفراز اکیڈمی اور گرلز کالج انتظامیہ کے مابین تنازع پر سماعت ہوئی۔ گرلز کالج کی جانب سے بتایا گیا کہ سرفراز احمد نے ہماری باو¿نڈری وال میں پچ بنادی ہے جس پر عدالت نے سرفراز احمد کو ذاتی حیثیت میں طلب کرلیا ہے۔



عدالت نے سرفراز احمد سے مبینہ کالج کی حدود میں پچ بنانے پر وضاحت طلب کرتے ہوئے ریمارکس دیئے ہیں کہ سرفراز احمد آئندہ سماعت پر خود پیش ہوں اور زمین کے تنازعے پر جواب جمع کرائیں۔دوسری جانب عدالت نے سماعت کو 3 ہفتوں کے لیے ملتوی کردیا ہے۔قبل ازیں کالج کی پرنسپل مسمات حسینہ فاطمہ نے سندھ ہائی کورٹ میں سرفرازاحمد پر غیرقانونی اکیڈمی چلانے کا الزام عائد کرتے ہوئے زمین پر سے قبضہ ختم کرانے کیلئے درخواست دائر کی تھی، جس میں کالج کو 7 ایکڑ زمین جبکہ اکیڈمک بلاک کی ایک ایکڑ زمین اکیڈمک بلاک کیلئے مختص کی گئی تھی۔



درخواست کے مطابق بلاک این نارتھ ناظم آباد پلاٹ نمبر ایس ٹی 7 ماسٹر پلان کے مطابق رفاعی پلاٹ ہے جبکہ سرفراز احمد کرکٹ اکیڈمی کی جانب سے غیر قانونی کرکٹ کلب چلارہے ہیں۔35 سالہ وکٹ کیپر بلے باز سرفراز احمد نے پاکستان کے لئے 49 ٹیسٹ میچ،117 ایک روزہ میچ اور 61 ٹی 20 میچ کھیلے۔سرفراز احمد کی قیادت میں پاکستان نے 2017 میں چیمپئنز ٹرافی جیتی تھی۔فائنل میں پاکستان نے بھارت کو شکست دی تھی۔سرفراز احمد کو 2019 کے ورلڈ کپ کے بعد کپتانی سے ہٹا دیا گیا تھا۔


24NewsPK: Former captain of national cricket team Sarfraz Ahmed has been summoned by Sindh High Court on the issue of making pitch within the boundaries of Girls College.

According to private TV Express News, the High Court heard a dispute in North Nazimabad between former captain Sarfraz Ahmed, Sarfraz Academy and the administration of Girls College. It was informed by the Girls College that Sarfraz Ahmed has made a pitch in our boundary wall on which the court has summoned Sarfraz Ahmed in person.


The court, while seeking clarification from Sarfraz Ahmed on making the pitch within the limits of the alleged college, remarked that Sarfraz Ahmed should appear in person at the next hearing and submit reply on the land dispute. On the other hand, the court adjourned the hearing for 3 weeks. Earlier, the principal of the college Mesmat Hasina Fatima had filed a petition in the Sindh High Court accusing Sarfraz Ahmed of running an illegal academy and seeking an end to the occupation of the land. The land was allotted for the academic block.

According to the request, Block N North Nazimabad Plot No. ST7 is a Rifai plot as per the master plan while Sarfraz Ahmed is running an illegal cricket club on behalf of the cricket academy. , Played 117 ODIs and 61 T20I matches. Under Sarfraz Ahmed, Pakistan won the Champions Trophy in 2017. Pakistan had beaten India in the final. Sarfraz Ahmed was removed from the captaincy after the 2019 World Cup.


42 views0 comments