• 24newspk

“بابر اعظم کراچی کنگز سے نہیں کھیلنا چاہتے” سابق کرکٹر نے بڑی خبر بریک کر دی


24 نیوز پی کے:پاکستان کے کپتان بابر اعظم اور کراچی کنگز کے ایچ بی ایل پاکستان سپر لیگ (پی ایس ایل) سیزن 8 کے ڈرافٹ سے قبل راستے الگ ہونے کا امکان ہے۔

28 سالہ نوجوان نے پی ایس ایل 7 میں فرنچائز کی قیادت کی جہاں وہ آخری نمبر پر رہے اور دس میں سے آٹھ میچ ہارے۔ڈائریکٹر وسیم اکرم کو بھی پی ایس ایل 7 میں بابر کو میدان میں ڈانٹتے ہوئے دیکھا گیا تھا، جب کہ انہوں نے جاری ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ کے دوران ایک مقامی اسپورٹس چینل پر تجزیہ کرتے ہوئے ان کے فیصلوں پر بھی تنقید کی تھی، جس میں خود کو نمبر 3 پر نہ کھلانا بھی شامل تھا۔



پاکستان کو بھی یہی مسئلہ درپیش ہے جہاں اوپنرز دفاعی انداز میں کھیل رہے ہیں اور بابر اپنی بیٹنگ کی جگہ بدلنے کو تیار نہیں ہیں۔ ذرائع کے مطابق بابر اعظم کنگز کی جانب سے کھیلنے میں دلچسپی نہیں رکھتے اور فرنچائز کو جلد ہی نئے کپتان کا فیصلہ کرنا پڑ سکتا ہے۔ واضح رہے کہ بابر پی ایس ایل 2 سے کراچی کنگز کا حصہ ہیں اور انہوں نے 2020 میں ٹرافی اٹھانے میں اہم کردار ادا کیا تھا۔


اس کے علاوہ راشد لطیف نے بھی یوٹیوب پر بات کرتے ہوئے یہ خبر بریک کی ہے کہ بابر اعظم کہتے ہیں کہ میرا دل نہیں کر رہا کراچی کنگز سے کھیلنے کا اور وہ کراچی کنگز سے نہیں کھیلنا چاہتے۔ ڈاکٹر نعمان نے بھی کہا کہ بابر پر ابھی برا ٹائم چل رہا ہے لیکن ہر کھلاڑی پر ایسا وقت آتا ہے اور مجھے بھی خبر ملی ہے کہ وہ نہیں کھیلنا چاہتے۔


24Newspk: Pakistan captain Babar Azam and Karachi Kings are likely to part ways ahead of the HBL Pakistan Super League (PSL) season 8 draft. The 28-year-old led the franchise in PSL 7 where they finished last and lost eight out of ten matches.


Director Wasim Akram was also seen scolding Babar on the field in PSL 7, while he also criticized his decisions while analyzing on a local sports channel during the ongoing T20 World Cup. No. 3 included not feeding myself.



Pakistan also have the same problem where the openers are playing defensively and Babar is not willing to change his batting position. According to sources, Babar Azam is not interested in playing for Kings and the franchise may have to decide on a new captain soon. It should be noted that Babar has been a part of Karachi Kings since PSL 2 and played an important role in lifting the trophy in 2020.


Apart from this, Rashid Latif has also broken the news while speaking on YouTube that Babar Azam says that he does not want to play with Karachi Kings and he does not want to play with Karachi Kings. Dr Nauman also said that Babar is going through a bad time but every player has such a time and I have also got the news that he does not want to play.

57 views0 comments